انسانی حقوق پر کام کرنے والی لڑکیوں نے شام کے مسئلہ پر یورپی یونین کی توجہ دلانے کے لیے 4500 جوتوں کے جوڑے رکھ دیے


Mian Fayyaz Ahmed Posted on May 29, 2018

اسلام آباد:شام میں ہونے والے مظالم سے دلبرداشتہ ہوکر انسانی حقوق پرکام کرنے والی ان لڑکیوں نے یورپی یونین کو غیرت دلانے کے لیے یورپی یونین کی بلڈنگ کے باہر 4500 جوتوں کے جوڑے رکھ دیے ان تصاویر میں واضح طور پردیکھا جاسکتا ہے کہ ان لڑکیوں نے کس طرح سے جوتوں کو لگا رکھا ہے۔

ان 4500 جوتوں کو وہاں رکھنے کا مطلب ان 4500 لوگوں کو بے جا قتل کرنے کا اظہار ہے جو کہ دہشتگرد اسرائیلی فوج نے پچھلے 10 سال میں شہید کیے ہیں۔ان تصاویر نے آتے ہی سوشل میڈیا پر خاصی شہرت حاصل کرلی ہے یہ تصاویر آتے ہی ہرجگہ پھیل گئی ہیں۔