روس کی جانب سے شام پر حملے کے خلاف سلامتی کونسل میں پیش کی گئی قرارداد مسترد ہوگئی


Mian Fayyaz Ahmed Posted on April 15, 2018

شام میں امریکہ ،برطانیہ اور فرانس کے مشترکہ حملے کے بعد روس کی جانب سے سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس طلب کیا گیا جس میں روس نے امریکہ اور اس کے اتحادیوں کے خلاف قرارداد پیش کی ۔

قرارداد کے حق میں صرف تین ووٹ آئے ہیں جبکہ مخالفت میں آٹھ ووٹ آئے ہیں،صرف روس ،چین اور بولیویا نے قرارداد کے حق میں ووٹ دیا جبکہ ووٹنگ میں‌ 4 ممالک نے حصہ نہیں لیا ہے،اس کے بعد قرارداد کے حق میں ووٹ کم ہونے کے باعث قرا رداد کو مسترد کر دیا گیا ہے ۔

سلامتی کونسل کے اجلاس میں روسی سفیر نے امریکہ اور اس کے اتحادیوں کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا اور حملے کو ایک آزاد ریاست کے خلاف جارحیت قرار دیا،ان کا کہنا تھا کہ امریکہ نے نے حملہ کر کے نہ صرف جنگی قوانین کی خلاف ورزی کی ہے بلکہ سیکیورٹی کونسل کو بھی کمزور کیا ہے ۔

جبکہ امریکی سفیر نیکی ہیلی کا کہنا تھا کہ اگر شام کیمیائی حملہ کرتا ہے تو امریکہ نمٹنے کے لیے تیار ہے۔